ممتا حکومت کا بڑا فیصلہ : مغربی بنگال میں ایک روپیہ سستا ہوا پیٹرول اور ڈیزل

ملک بھر میں بڑھتی پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں کو لے کر بحث جاری ہے ۔ اس درمیان مغربی بنگال حکومت نے بڑا اعلان کرتے ہوئے ایندھن کی قیمتوں میں کمی کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ سرکار نے آج رات نصف شب سے پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں ایک روپے کی کمی کرنے کا اعلان کیا ہے ۔ خاص بات یہ ہے کہ ملک کے کئی شہروں میں موٹر ایندھنوں کی قیمتیں سو کا ہندسہ پار کر گئی ہیں ۔ اپوزیشن پارٹیاں اور عام لوگ مسلسل مرکزی حکومت پر نشانہ سادھ رہے ہیں ۔


نیوز ایجنسی اے این آئی کے مطابق وزیر خزانہ امت مترا نے ایندھن کی قیمتوں کو لے کر یہ جانکاری دی ہے ۔ ریاست کی راجدھانی کولکاتہ میں اتوار کو پٹرول کی قیمت 91 روپے 78 پیسے تھی جبکہ ڈیزل 84 روپے 56 پیسے فی لیٹر فروخت ہورہا تھا ۔ راجدھانی دہلی میں اتوار کو پٹرول 90 روپے 58 پیسے فی لیٹر کے دام سے بیچا جارہا ہے ۔ خاص بات یہ ہے کہ ریاست میں اس سال اسمبلی انتخابات ہونے والے ہیں ۔ وہیں ممتاسرکار کا یہ فیصلہ کافی اہم ہوسکتا ہے ۔


اس سے پہلے ریاست کی وزیر اعلی ممتا بنرجی نے بھی مرکزی حکومت پر نشانہ سادھا تھا ۔ انہوں نے گزشتہ پیر کو کہا تھا کہ مرکزی حکومت الیکشن سے کچھ دن پہلے قیمتوں میں کمی کرے گی ۔ وزیر اعلی نے کہا تھا کہ وہ ہردن ایل پی جی اور ڈیزل کی قیمتیں بڑھا رہی ہے ۔ یہ تشویش کی بات ہے ۔ مرکزی حکومت الیکشن آنے سے کچھ دن پہلے ہی قیمتوں میں کمی کرے گی ۔خیال رہے کہ فروری میں پٹرول کی قیمت چار روپے 29 پیسے اور ڈیزل کی قیمت چار روپے 31 پیسے فی لیٹر بڑھی ہے ۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق دونوں ایندھنوں کی قیمتوں میں اسسال تقریبا 24 مرتبہ اضافہ کیا جاچکا ہے ۔


Related Articles

Back to top button
Don`t copy text!
Close